ادارۂ فکر نو کراچی کی تشکیل نو

 

کراچی (اسٹاف رپورٹر) یاد گار نور احمد مرٹھی‘ ادارۂ فکر نو کراچی کے سرپرست اعلیٰ‘ معروف سماجی رہنم ا اور صحافی‘ پیر انتظام الدین موتی کی زیر صدارت ادارے کا ایک خصوصی اجلاس ہوا‘ جس میں 2013ء کے لیے تشکیل نو کی گئی‘ تفصیلات کے مطابق سید جواد حیدر نقوی‘ ظفر محمد خان ظفر‘ مظہر ہانی‘ انور انصاری اور اویس ادیب انصاری (سرپرست) اختر سعیدی (نگران اعلیٰ) محمد علی گوہر (صدر) تابش اختر شاداب (نائب صدر) رشید خان رشید (جنرل سیکرٹری) بابر خان نیازی (جوائنٹ سیکرٹری) شگفتہ فرحت (نگراں شعبۂ خواتین) اراکین مجلس عاملہ میں صمد تاجی‘ غزالی بن جاوید‘ نجیب راہی‘ انیس الرحمن نجم‘ کامران غوری اور شفیق الرحمن نیر شامل ہیں۔
جشن رفیقان سخن
ادارۂ فکر نو کے سرپرست اعلیٰ‘ ممتاز سماجی رہنما اور صحافی‘ پیر انتظام الدین موتی نے کہا ہے کہ کراچی کے مضافات میں بھی اچھا ادب تخلیق ہورہا ہے‘ لانڈھی کورنگی کو ایک ’’دبستان‘‘ کا درجہ حاصل ہے‘ اس جڑواں بستی نے صہبا اختر‘ خالد علیگ‘ جوہر سعیدی‘ حکیم انجم فوقی بدایونی‘ رسا چغتائی‘ شکیل احمد ضیائ‘ مجیب خیر آبادی‘ قمر ہاشمی‘ قمر ساحری‘ ڈاکٹر شاہد الوری‘ کیف بنارسی‘ پیر زادہ عاش کیرانوی‘ نقاش کاظمی‘ سلیم کوثر‘ جمال احسانی‘ نور احمد میرٹھی‘ اشفاق حسین‘ ساجد امجد‘ اشرف شاد‘ عزم بہزاد‘ ڈاکٹر شادب احسانی‘ انور انصاری جیسے نامور اہل قلم پیدا کیے‘ جنہیں ملک گیر شہرت حاصل ہوئی‘ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ادارۂ فکر نو کراچی کے ایک خصوصی اجلاس کے موقع پر اپنے صدارتی خطاب میں کیا۔ انہوں نے اعلان کیا کہ مارچ میں ’’جشن رفیقان سخن‘‘ کا اہتمام کیا جائے گا‘ جس کی تیاریاں عروج پر ہیں‘ اس موقع پر عظیم الشان مفحل مشاعرہ بھی رکھی گئی ہے جو ان شعرا کے اعزاز میں ہوگی‘ جو لانڈھی کورنگی سے ہجرت کرکے شہر کے مختلف علاقوں میں رہائش پذیر ہوگئے ہیں‘ جشن کے موقع پر ان شعرا کو بھی خراج عقیدت پیش کیا جائے گا جو ہم سے بچھڑ گئے ہیں‘ اجلاس سے ادارۂ فکر نو کے نگران اعلیٰ اختر سعیدی‘ صدر محمد علی گوہر‘ نائب صدر تابش اختر شاداب‘ جنرل سیکرٹری رشید خان رشید اور جوائنٹ سیکرٹری بابر خان نیازی نے بھی خطاب کیا۔